بے کس بے سہاروں کا سہا را ہے حبیب ِ خدا

بے کس بے سہاروں کا سہا را ہے حبیب ِ خدا دونوں جہا نوں کاسب سے پیارا ہے حبیب ِ خدا چمکتی پیار ی جبین سے روشن ہے سا را جہاں دونوں عالم کا اعلیٰ اور د لارا ہے حبیب ِ خدا ترستی ہیں آ نکھیں میر ی دیدارِ مصطفی کو میرے د ل کی […]

 مزید پڑھیں

گونج آتی رہے گی ارض وسما سے جمال کے سا تھ

گونج آتی رہے گی ارض وسما سے جمال کے سا تھ پکارتے رہے گے بحروبر نا مِ محمد کمال کے سا تھ حاضر ہوتے تھے ا دب سے شجر دامنِ مصطفی میں بولتے تھے حجر بھی یا مصطفی بلال کے سا تھ خدا بھیجتار ہے گا درودو سلام نذیروبشیر پر مناتے رہے گے فرشتے بذم […]

 مزید پڑھیں

ﺭﺍﺕ ﮐﺎ ﻓﺴﺎﻧﮧ ﮐﮩﺘﺎ ﮨﮯ ﺳﺘﺎﺭﮮ ﺑﺎﺕ ﻧﮩﯿﮟ

ﺭﺍﺕ ﮐﺎ ﻓﺴﺎﻧﮧ ﮐﮩﺘﺎ ﮨﮯ ﺳﺘﺎﺭﮮ ﺑﺎﺕ ﻧﮩﯿﮟ ﮐﺮﺗﮯ ﺍﺣﺴﻦ ﺍﯾﮏ ﻃﻮﯾﻞ ﺩﺭﺩ ﮨﮯ ﮨﻢ ﮈﺭ ﮐﮯ ﻣﺎﺭﮮ ﺑﺎﺕ ﻧﮩﯿﮟ ﮐﺮﺗﮯ ﺍﺣﺴﻦ، ﺷﯿﺸﺎ ﻭ ﺟﺎﻡ ﻭ ﻟﺐ ﮐﺎ ﺭﺷﺘﮧ ﺑﮭﯽ ﮨﮯ ﺍﺯﻝ ﺳﮯ ﮔﮩﺮﺍ، ﺧﺎﻣﻮﺵ ﮨﯿﮟ ﻣﮕﺮ ﺳﺎﺭﮮ ﺑﺎﺕ ﻧﮩﯿﮟ ﮐﺮﺗﮯ ﺍﺣﺴﻦ ﻧﮧ ﺩﺳﺖ ﮨﯿﮟ ﮐﺴﯽ ﺯﻧﺠﯿﺮ ﻣﯿﮟ ﻧﮧ ﻟﺐ ﮐﺴﯽ ﺯﻧﺪﺍﻥ ﻣﯿﮟ، ﻣﺤﻠﻮﻟﯿﺖ ﻣﯿﮟ […]

 مزید پڑھیں
Copyright 2020 | Anzik Writers