گلشن میں ہم نے گل و خار دیکھے ہیں۔۔

گلشن میں ہم نے گل و خار دیکھے ہیں۔۔ جاگتی آنکھوں سے سپنے ہزار دیکھے ہیں۔۔ لوگ کہتے ہیں گدھ ہوا میں اڑا کرتے ہیں۔۔ ہم نے زمین پہ چلتے بے شمار دیکھے ہیں۔۔ نشے میں بھی جن کو خدا یاد رہے۔۔ میکدے میں ایسے بھی مے خوار دیکھے ہیں۔۔ حیا کے لبادے اوڑھے ہیں […]

 مزید پڑھیں

محبت کا جب بھی تم حال لکھنا۔۔

محبت کا جب بھی تم حال لکھنا۔۔ لازم ہے کہ میرا بھی زوال لکھنا۔۔ تم لکھنا خود کو گلشن گلستاں۔۔ مجھ کو تم کانٹے سی مثال لکھنا۔۔ جو لکھو تو اپنی دل لگی کا ذکر کرنا۔۔ عشق کو میرےتم لازوال لکھنا۔۔ نہیں سر لینا تم اپنے الزام کوئی۔۔ بچھڑنے کو وقت کی کوئی چال لکھنا۔۔ […]

 مزید پڑھیں
Copyright 2020 | Anzik Writers