زمانہ آیا ہے بے حجابی کا عام دیدار یار ہوگا

زمانہ آیا ہے بے حجابی کا عام دیدار یار ہوگا سکوت تھا پردہ دار جس کا وہ راز اب آشکار ہوگا گزر گیا اب وہ دور ساقی کہ چھپ کے پیتے تھے پینے والے بنے گا سارا جہان مے خانہ ہر کوئی بادہ خوار ہوگا کبھی جو آوارۂ جنوں تھے وہ بستیوں میں آ بسیں […]

 مزید پڑھیں

گرچہ تو زنداني اسباب ہے

گرچہ تو زنداني اسباب ہے قلب کو ليکن ذرا آزاد رکھ عقل کو تنقيد سے فرصت نہيں عشق پر اعمال کي بنياد رکھ اے مسلماں! ہر گھڑي پيش نظر آيہ 'لا يخلف الميعاد' رکھ يہ 'لسان العصر' کا پيغام ہے "ان وعد اللہ حق'' ياد رکھ"

 مزید پڑھیں

خردمندوں سے کيا پوچھوں کہ ميری ابتدا کيا ہے کہ ميں اس فکر ميں رہتا ہوں ، ميری انتہا کيا ہے

خردمندوں سے کيا پوچھوں کہ ميری ابتدا کيا ہے کہ ميں اس فکر ميں رہتا ہوں ، ميری انتہا کيا ہے اگر ہوتا وہ مجذوب فرنگی اس زمانے ميں تو اقبال اس کو سمجھاتا مقام کبريا کيا ہے

 مزید پڑھیں

ے یاد مجھے نکتۂ سلمان خوش آہنگ

ہے یاد مجھے نکتۂ سلمان خوش آہنگ دنیا نہیں مردان جفاکش کے لیے تنگ چیتے کا جگر چاہیئے شاہیں کا تجسس جی سکتے ہیں بے روشنی دانش و فرہنگ کر بلبل و طاؤس کی تقلید سے توبہ بلبل فقط آواز ہے طاؤس فقط رنگ

 مزید پڑھیں

الفاظ و معانی میں تفاوت نھیں لیکن (شاھین).

الفاظ و معاني ميں تفاوت نہيں ليکن ملا کي اذاں اور مجاہد کي اذاں اور پرواز ہے دونوں کي اسي ايک فضا ميں کرگس کا جہاں اور ہے ، شاہيں کا جہاں اور

 مزید پڑھیں

ہوا نہ زور سے اس کے کوئی گریباں چاک

ہوا نہ زور سے اس کے کوئی گریباں چاک اگرچہ مغربیوں کا جنوں بھی تھا چالاک مے یقیں سے ضمیر حیات ہے پرسوز نصیب مدرسہ یا رب یہ آب آتش ناک عروج آدم خاکی کے منتظر ہیں تمام یہ کہکشاں یہ ستارے یہ نیلگوں افلاک یہی زمانۂ حاضر کی کائنات ہے کیا دماغ روشن و […]

 مزید پڑھیں

یہ پیران کلیسا و حرم اے وائے مجبوری

یہ پیران کلیسا و حرم اے وائے مجبوری صلہ ان کی کد و کاوش کا ہے سینوں کی بے نوری یقیں پیدا کر اے ناداں یقیں سے ہاتھ آتی ہے وہ درویشی کہ جس کے سامنے جھکتی ہے فغفوری کبھی حیرت کبھی مستی کبھی آہ سحرگاہی بدلتا ہے ہزاروں رنگ میرا درد مہجوری حد ادراک […]

 مزید پڑھیں

یہ دیر کہن کیا ہے انبار خس و خاشاک

یہ دیر کہن کیا ہے انبار خس و خاشاک مشکل ہے گزر اس میں بے نالۂ آتش ناک نخچیر محبت کا قصہ نہیں طولانی لطف خلش پیکاں آسودگئ فتراک کھویا گیا جو مطلب ہفتاد و دو ملت میں سمجھے گا نہ تو جب تک بے رنگ نہ ہو ادراک اک شرع مسلمانی اک جذب مسلمانی […]

 مزید پڑھیں

بے وفائی کرکے نکلوں یا وفا کر جاؤں گا

بے وفائی کرکے نکلوں یا وفا کر جاؤں گا شہر کو ہر ذائقے سے آشنا کر جاؤں گا تو بھی ڈھونڈے گا مجھے شوق سزا میں ایک دن میں بھی کوئی خوبصورت سی خطا کر جاؤں گا مجھ سے اچھائی بھی نہ کر میری مرضی کے خلاف ورنہ میں بھی ہاتھ کوئی دوسرا کر جاؤں […]

 مزید پڑھیں
1 9 10 11
Copyright 2020 | Anzik Writers