ہے خرد مندی یہی باہوش دیوانہ رہے

ہے خرد مندی یہی باہوش دیوانہ رہے ہے وہی اپنا کہ جو اپنے سے بیگانہ رہے کفر سے یہ التجائیں کر رہا ہوں بار بار جاؤں تو کعبہ مگر رخ سوئے مے خانہ رہے شمع سوزاں کچھ خبر بھی ہے تجھے او مست غم حسن محفل ہے جبھی جب تک کہ پروانہ رہے زخم دل […]

 مزید پڑھیں

یوں تو جو چاہے یہاں صاحب محفل ہو جائے

یوں تو جو چاہے یہاں صاحب محفل ہو جائے بزم اس شخص کی ہے تو جسے حاصل ہو جائے ناخدا اے مری کشتی کے چلانے والے لطف تو جب ہے کہ ہر موج ہی ساحل ہو جائے اس لیے چل کے ہر اک گام پہ رک جاتا ہوں تا نہ بے کیف غم دورئ منزل […]

 مزید پڑھیں

اوہ کیسا شعبدہ گر تھا

اوہ کیسا شعبدہ گر تھا جو مصنوعی ستاروں اور نقلی سورجوں کی اک جھلک دکھلا کے میرے سادہ دل لوگوں کی آنکھوں کے دیئے ہونٹوں کے جگنو لے گیا اور اب یہ عالم ہے کہ میرے شہر کا ہر اک مکاں اک غار کی مانند محروم نوا ہے اور ہنستا بولتا ہر شخص اک دیوار […]

 مزید پڑھیں

کس بوجھ سے جسم ٹوٹتا ہے

کس بوجھ سے جسم ٹوٹتا ہے اتنا تو کڑا سفر نہیں تھا وہ چار قدم کا فاصلہ کیا پھر راہ سے بے خبر نہیں تھا لیکن یہ تھکن یہ لڑکھڑاہٹ یہ حال تو عمر بھر نہیں تھا آغاز سفر میں جب چلے تھے کب ہم نے کوئی دیا جلایا کب عہد وفا کی بات کی […]

 مزید پڑھیں

اب نہ بہل سکے گا دل اب نہ دیے جلائیے

اب نہ بہل سکے گا دل اب نہ دیے جلائیے عشق و ہوس ہیں سب فریب آپ سے کیا چھپائیے اس نے کہا کہ یاد ہیں رنگ طلوع عشق کے میں نے کہا کہ چھوڑیئے اب انہیں بھول جائیے کیسے نفیس تھے مکاں صاف تھا کتنا آسماں میں نے کہا کہ وہ سماں آج کہاں […]

 مزید پڑھیں

کہیں امید سی ہے دل کے نہاں خانے میں

کہیں امید سی ہے دل کے نہاں خانے میں ابھی کچھ وقت لگے گا اسے سمجھانے میں موسم گل ہو کہ پت جھڑ ہو بلا سے اپنی ہم کہ شامل ہیں نہ کھلنے میں نہ مرجھانے میں ہم سے مخفی نہیں کچھ رہ گزر شوق کا حال ہم نے اک عمر گزاری ہے ہوا کھانے […]

 مزید پڑھیں

میرے دل کی راکھ کرید مت اسے مسکرا کے ہوا نہ دے

میرے دل کی راکھ کرید مت اسے مسکرا کے ہوا نہ دے یہ چراغ پھر بھی چراغ ہے کہیں تیرا ہاتھ جلا نہ دے نئے دور کے نئے خواب ہیں نئے موسموں کے گلاب ہیں یہ محبتوں کے چراغ ہیں انہیں نفرتوں کی ہوا نہ دے ذرا دیکھ چاند کی پتیوں نے بکھر بکھر کے […]

 مزید پڑھیں

Naye Kapre Badal Kar Jaon Kahan, Aur Baal Banaon Kis K Liye

Naye Kapre Badal Kar Jaon Kahan, Aur Baal Banaon Kis K Liye Woh Shakhs To Shehar Hi Chor Giya Mein Bahir Jaon Kis Kay Liye Jis Dhoop Ki Dil Mein Thandak Thi Woh Dhoop Ussi Kay Sath Gai In Jaldi Balti Galion Mein Ab Khaak Uraon Kis Kay Liye Wo Shehr Mein Tha To Uss […]

 مزید پڑھیں

Apni Dhun Men Rahta Huun

Apni Dhun Men Rahta Huun Main Bhi Tere Jaisa Huun O Pichhli Rut Ke Sathi Ab Ke Baras Main Tanha Huun Teri Gali Men Saara Din Dukh Ke Kankar Chunta Huun Mujh Se Aankh Mila.E Kaun Main Tera A.Ina Huun Mera Diya Jala.E Kaun Main Tira Khali Kamra Huun Tere Siva Mujhe Pahne Kaun Main […]

 مزید پڑھیں

Dil Men Ik Lahr Si Uthi Hai Abhi

Dil Men Ik Lahr Si Uthi Hai Abhi Koi Taaza Hava Chali Hai Abhi Kuchh To Nazuk Mizaj Hain Ham Bhi Aur Ye Chot Bhi Na.I Hai Abhi Shor Barpa Hai Khana-E-Dil Men Koi Divar Si Giri Hai Abhi Bhari Duniya Men Ji Nahin Lagta Jaane Kis Chiiz Ki Kami Hai Abhi Tu Sharik-E-Sukhan Nahin […]

 مزید پڑھیں
Copyright 2020 | Anzik Writers